78

کنٹونمنٹ بورڈ راولپنڈی پر بھتہ مافیا کا راج

کنٹونمنٹ بورڈ راولپنڈی پر بھتہ مافیا کا راج

صدر کی ہر ہر روڈ پر چھابڑی فروشوں، سمز، غبارے، عینک غرض کہ فوڈ سٹالز لگانے والے سے روز 300,500 اور 1000 روپے بطور بھتہ روزانہ کی بنیاد پر وصول کیے جارہے

یہ مکروہ دھندہ RCB میں بھرتی معمولی ملازم راجہ ندیم کی چھتر چھایہ تلے دیدہ دلیری سے جاری و ساری

بھتہ نہ دینے والے غریب محنت کشوں پر کنٹونمنٹ کا عملہ بدترین تشدد کرتا جس کی تازہ مثال👇👇👇👇👇👇👇👇

‏گویا ریاست مدینہ میں غریبوں کو حلال روزی کمانے لیے سرکاری محکموں کو “بھتہ” دینا لازمی ٹھہرا!

‏راولپنڈی: صدر بازار میں مرید حسین نامی غریب غبارے فروش پر ⁦‪@CEORawalpindi‬⁩ کی بھتہ خور انفورسمنٹ ٹیم (سربراہ راجہ ندیم مالی) کا 300 روپے بھتہ نہ دینے پر مبینہ طور پر بدترین تشدد؛ اغواہ ‏کر کے دفتر لے گئے اور ٹھڈوں سے چہرے پر ضربیں لگائیں؛ بعد ازاں ڈالے میں پھینکا اور گولڑہ موڑ لے کر کر پھینک دیا؛ میں بے حوش ہو گیا؛ حوش آنے پر پولیس کی گاڑی آئی اور بٹھایا/500 روپے دیے اور میں صدر پہنچا/رات کو پھر مارا کمیٹی والوں نے/تھانہ گیا مگر انصاف نہ ملا: زخمی مرید حسین

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں