36

ڈیرہ اسماعیل خان میں غیرت کے نام پر دوہرے قتل کی المناک واردات عدالت سے واپسی پر میاں بیوی کو کار میں سوار افراد نے فائرنگ کرکے موت کے گھاٹ اتاردیا

از طرف محمد ریحان
ڈیرہ اسماعیل خان : تھانہ صدر کی حدودمیں پسند کی شادی و غیرت کے نام پر دوہرے قتل کی لرزہ خیز واردات،عدالت سے پیشی سے واپس گھر جانیوالے گائوں حسام کے رہائشی جمیل اور اس کی جوانسال اہلیہ کو موٹرکار میں سوارچار مسلح ملزما ن نے ٹانک روڈ بیٹنی آبادکے قریب فائرنگ کرکے موت کے گھات اتار دیا۔ تفصیلات کے مطابق گائوں حسام کا رہائشی 22سالہ جمیل احمدولد شاہجہان اپنی جوانسالہ اہلیہ ث بی بی کے ہمراہ موٹر سائیکل پرمقامی عدالت سے پیشی کے بعد واپس اپنے گھر جارہا تھا کہ تھانہ صدر کی حدود بیٹنی آباد ٹانک روڈ پرموٹر کار سوار افراد نے پہلے ان کی موٹر سائیکل کو ٹکر ماری بعدازاں گاڑی میں سوار مسلح افراد اللہ نواز، شاہنواز ولد اللہ داد، اقبال ، عارف ولد الٰہی بخش سکنائے حسام نے گاڑی سے اتر کر دونوں میاں بیوی پر اندھادھند فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں جمیل احمد اور اس کی اہلیہ ث بی بی موقع پر ہی دم توڑ گئے۔ دوہرے قتل کی واردات کی اطلاع پر ڈی ایس پی صدر سرکل حافظ محمدعدنان خان اور ایس ایچ او تھانہ صدر کرم الٰہی کی قیادت میں مقامی پولیس اور ریسکیو1122کی میڈیکل ٹیم جائے حادثہ پر پہنچ گئی اور دونوں مقتولین کی نعشوں کو سول ہسپتال ڈیرہ منتقل کیا جہاں پوسٹ مارٹم کے بعد نعشیں ورثاء کے حوالے کردی گئیں جبکہ پولیس نے موقع واردات سے شواہد اکٹھے کرکے تفتیش شروع کردی ہے۔ پولیس کے مطابق مقتول جمیل احمد نے چند ماہ قبل پسند کی شادی کی تھی اور واردات اسی کا شاخسانہ بتائی جارہی ہے۔

از طرف محمد ریحان
ڈیرہ اسماعیل خان : دریا سندھ کنارے مندھراں والی ٹی کے مقام پردریا میں نہانے کیلئے اترنے والا گائوں مندھراں کا رہائشی نوجوان گہرے پانی میں ڈوب گیا، ڈوبنے والے نوجوان کو بچانے کیلئے دریا میں کودنے والا بستی دربار والی کا رہائشی نوجوان بھی دریا کی ظالم موجوں کی نظر ہوگیا۔ واقعہ کی اطلاع پر ریسکیو1122ڈوبنے والے افراد کی تلاش کیلئے خوطہ خوروں اور مقامی افراد کی امدادی کاروائیاں جاری۔ تفصیلات کے مطابق دریائے سند ھ کنارے مندھراں والی ٹی کے مقام پربستی دربار والی کے قریب جانور چرانے والا مقامی چرواہانعمان سکنہ مندھراں نہانے کی غرض سے دریا سندھ میںاترا اور گہرے پانی میں ڈوبنے لگاجسکو بچانے کیلئے قریب ہی موجود خالد سکنہ بستی دربار والی نے پانی میں چھلانگ لگائی تاہم وہ بھی دریا کی ظالم موجوں کی نظر ہوگیا۔ واقعہ کی اطلاع پر ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر ریسکیو1122فضل منان کی ہدایت پر ریسکیو1122کے خوطہ خور جائے حادثہ پر پہنچ گئے اور مقامی افراد کی مدد سے ڈوبنے والے نوجوانوں کی تلاش شروع کردی ۔ آخری اطلاعات تک ڈوبنے والے نوجوانوں کی تلاش کیلئے امدادی کاروائیاں جاری تھیں۔

از طرف محمد ریحان
ڈیرہ اسماعیل خان :تھانہ کینٹ کی حدود میں بستی درکھانوالی کے قریب اراضیات میں 53سالہ فضل محمود ولد خان بہادر بلوچ سکنہ دین پور روڈ حال گلشن قمر کالونی مینار مسجد درابن روڈکو نامعلوم افراد نے فائرنگ کرکے قتل کردیا۔ تفصیلات کے مطابق تھانہ کینٹ میں ظفرخان ولدخان بہادر بلوچ نے رپورٹ درج کرائی ہے کہ اس کے بھائی53سالہ فضل محمود کو نامعلوم مسلح افراد نے فائرنگ کرکے موت کے گھات اتار دیا۔ پولیس نے مقتول کے بھائی کی رپورٹ پر اس واقعہ کا مقدمہ درج کرلیا۔

از طرف محمد ریحان
ڈیرہ اسماعیل خان : پاکستان سٹیزن پورٹل پر موصول شکایت اور ڈپٹی کمشنر ڈیرہ کی ہدایت پر اسسٹنٹ کمشنر ڈیرہ کی قیادت میں سی اینڈ، ٹی ایم اور محکمہ مال کے حکام کا مقامی پولیس کے ہمراہ مین ظفر آباد روڈ موضع کوٹ بٹہ، مڈی روڈ پر غیر قانونی تجاوزات کیخلاف گرینڈ آپریشن،ساڑھے چار کروڑ روپے سے زائد مالیت کا 15کنال 9مرلہ کمرشل رقبہ واگزار کرالیا۔ تفصیلات کے مطابق پاکستان سٹیزن پورٹل پر موصول شکایت اور ڈپٹی کمشنر ڈیرہ عارف اللہ اعوان کی ہدایت پر اسسٹنٹ کمشنر ڈیرہ نواب سمیر حسین لغاری نے ایکسین سی اینڈ ڈبلیو روڈز،تحصیل میونسپل آفیسر ڈیرہ عمر خان کنڈی ، محکمہ مال اور مقامی پولیس کے ہمراہ مین ظفر آباد روڈ موضع کوٹ بٹہ، مڈی روڈ پر غیر قانونی تجاوزات کیخلاف گرینڈ آپریشن کیا۔ اس دوران 15کنال 9مرلہ کمرشل رقبہ پر قائم عارضی اور مستقل غیر قانونی تجاوزات کو بھاری مشینری کی مدد سے موقع پر ختم کرا دیا گیا۔ اس موقع پر اسسٹنٹ کمشنر نواب سمیر حسین لغاری نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ واگزار کرائی گئی اراضی کی کل مالیت چار کروڑ تریسٹھ لاکھ، پچاسی ہزار روپے ہے۔ان کا کہنا تھا کہ صوبائی حکومت کی پالیسی کے تناظر میں ناجائز تجاوزات کیخلاف بلاامتیاز کاروائیاں جاری رہیں گی، حالیہ آپریشن سے ٹریفک کی روانی میںرکاؤٹ کا مسئلہ حل ہونے میںبھی آسانی ہو گی۔

از طرف محمد ریحان
ڈیرہ اسماعیل خان : ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن آفیسر ڈیرہ خالد خلیل نے کم سن بچوں کی جانب سے گاڑیاں اور موٹر سائیکل چلانے کی حوصلہ شکنی کیلئے محکمہ ایکسائز کی جانب سے کاروائی کا عندیہ دیدیا، موٹرسائیکل اور موٹر کار قبضے میں لینے کے ساتھ ساتھ بھاری جرمانے کی سزا ہوگی، والدین سے تعاون کی اپیل۔ تفصیلات کے مطابق کمسن بچوں کی جانب سے موٹر سائیکل اور گاڑی ڈرائیونگ کی صورت میں ٹریفک کے بڑھتے ہوئے حادثات کے تدارک اور کمسن ڈرائیورز کی حوصلہ شکنی کیلئے محکمہ ایکسائز کی جانب سے جلد خصوصی کاروائیوں کا آغاز کیا جارہا ہے۔ ان خیالات کا اظہار ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن آفیسر ڈیرہ خالد خلیل نے میڈیا سے خصوصی نشست کے دوران کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ اس ضمن میں موٹرسائیکل اور موٹر کار قبضے میں لینے کے ساتھ ساتھ بھاری جرمانے کی سزا بھی ہوگی۔ والدین اپنے بچوں کے ساتھ ساتھ دوسروں کی زندگیوں کے تحفظ کیلئے محکمہ ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن کے ساتھ تعاون کریں۔

از طرف محمد ریحان
ڈیرہ اسماعیل خان : زنانہ ہسپتال ڈیرہ اسماعیل خان میں جدید ترین لائبریری کا افتتاح ،مہمان خصوصی نامور رائٹر اور سائیکاٹرسٹ ڈاکٹر شاہد مسعود خٹک نے فیتہ کاٹ کر افتتاح کیا،آغا خان ہسپتال کراچی کی طرز پر بنائی گئی لائبریری سے ڈاکٹرز و میڈیکل سٹوڈنٹس کو طبی کتب کے علاوہ دیگر علم وادب کے مطالعہ کی سہولت مہیا ہو گی، میڈیکل ڈائریکٹرڈاکٹر نسیم صبا محسود ۔تفصیلات کے مطابق گائنی ڈیپارٹمنٹ گومل میڈیکل کالج ڈیرہ اسماعیل خان کی طرف سے زنانہ ہسپتال میں ڈاکٹرز اور میڈیکل سٹوڈنٹس کے لیے قائم کردہ جدید ترین لائبریری کی افتتاحی تقریب منعقد ہوئی ۔ مہمان خصوصی نامور رائٹر اور سائیکاٹرسٹ ڈاکٹر شاہد مسعود خٹک نے فیتہ کاٹ کر افتتاح کیا۔یہ لائبریری میڈیکل ڈائریکٹر اور گائنی ڈیپارٹمنٹ کی سربراہ ڈاکٹر نسیم صبا محسود کی نگرانی اور خصوصی کاوشوں سے مکمل طور اپنی مدد آپ کے تحت بنائی گئی ہے۔آغا خان ہسپتال کراچی کی طرز پر بنائی گئی اس خوبصورت لائبریری سے ڈاکٹرز اور میڈیکل سٹوڈنٹس کو طبی کتب کے علاوہ دیگر علم وادب کے مطالعہ کی سہولت مہیا ہو گی۔افتتاحی تقریب سے میڈیکل ڈائریکٹر اور لائبریری کی منتظم اعلیٰ پروفیسر ڈاکٹر نسیم صبا محسوداور وائس ڈین گومل میڈیکل کالج پروفیسر ڈاکٹر میر امان اللہ نے خطاب کیا۔ تقریب میں ہاسپٹل ڈائریکٹر ڈاکٹر فرخ جمیل، تمام شعبہ جات کے سربراہان، گائنی ڈیپارٹمنٹ کی ڈاکٹرز اور میڈیکل سٹوڈنٹس نے شرکت کی۔افتتاح تقریب کے بعد مہمان خصوصی ڈاکٹر شاہد مسعود خٹک نے ”کمیونیکیشن سکلز”کے موضوع پر شرکاء کو لیکچر دیا۔اس تقریب کی نظامت ڈاکٹر اکرم اللہ سپرلے نے کی

از طرف محمد ریحان
ڈیرہ اسماعیل خان : سیکٹر ہیڈکوارٹر ساؤتھ اور فرنٹیر کور کے تعاون سے خسرائے سورگر کے مقام پرفری میڈیکل کیمپ کا انعقاد،علو منے ،کلے ڈیک اور دین محمد کے علاوہ ملحقہ دیہاتوں کے260 سے زائد مریضوں کو مفت علاج معالجہ کی سہولیات کے ساتھ ساتھ مفت ادویات بھی فراہم کی گئیں۔ تفصیلات کے مطابق خسرائے سورگر کے مقام پر سیکٹر ہیڈکوارٹر ساؤتھ اور فرنٹیر کور کے تعاون سے فری میڈیکل کیمپ کا انعقاد کیا گیا۔جس میں علو منے ،کلے ڈیک اور دین محمد کے علاوہ دیگر ملحقہ دیہاتوں سے بھی لوگ اپنا چیک اپ کروانے آئے۔میڈکل کیمپ سے 260سے زیادہ مریضوں نے استفادہ حاصل کیا جن کا نہ صرف مفت علاج کیا گیا بلکہ تمام مریضوں کو مفت ادوایات بھی فراہم کی گئیں۔ میڈیکل سٹاف میں آرمی ڈاکٹر اور سٹاف کے علاوہ میڈیکل سپیشلسٹ ، چائلڈ سپیشلسٹ ، دو لیڈی ہیلتھ ورکرز اور ایک ایمبولینس سول ڈیپارٹمنٹ کی طرف سے آئے۔ اہلیان علاقہ نے سیکٹر ہیڈکوارٹر ساؤتھ اور فرنٹیر کور کے اس اقدام کو سراہا اور اس کاوش کا شکریہ ادا کیا۔

از طرف محمد ریحان
ڈیرہ اسماعیل خان :ضم شدہ قبائلی تحصیل درازندہ کے گائوں امن میلہ میں5سالہ بچے سلیمان کو سانپ نے کاٹ لیا، ریسکیو1122درازندہ کی میڈیکل ٹیم نے ابتدائی طبی امداد مہیا کر کے درازندہ ٹائپ ڈی ہسپتال منتقل کر دیا۔ میڈیا کوآرڈی نیٹرریسکیو1122اعزازمحمود کی رپورٹ کے مطابق ضم شدہ قبائلی تحصیل درازندہ کے گائوں امن میلہ میں5سالہ بچے سلیمان کو گھر میں کام کاج کے دوران سانپ نے کاٹ لیا۔ واقعہ کی اطلاع میڈیکل ٹیم نے فوری طور پر موقع پر پہنچ کربچے کو موقع پر ابتدائی طبی امداد مہیا کر کے درازندہ ٹائپ ڈی ہسپتال منتقل کر دیا ۔

از طرف محمد ریحان
ڈیرہ اسماعیل خان : گورنمنٹ آف خیبرپختونخوا ایلیمنٹری اینڈ سکینڈری ایجوکیشن اور ٹیکسٹ بک بورڈ پشاور کی طرف سے لازمی مضمون سرائیکی جماعت ششم تا سرائیکی کتاب بارہویں تک صرف ایک پبلشر کی کتاب کی اشاعت پر سرائیکی تنظیموں اور عوامی حلقوں کا احتجاج ۔ تفصیلات کے مطابق مختلف ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ سرائیکی کتب اول تا پنجم کی اشاعت میں مختلف پبلشرز جن میں آفاق پبلشرز،ای پبلشر،لیڈی بک پبلشر،یونیورسٹی بک پبلشر اور ایم این پبلشر نے حصہ لیا ۔ اور ایک سخت مقابلہ کے بعد کوالٹی کی بنیادی پر ایک کتاب سلیکٹ ہوئی جسے ٹیکسٹ بک بورڈ پشاور شائع کرتا رہا ہے جبکہ جماعت ششم تا بارہویں تک صرف ایک پبلشر ایم این کی کتاب کو شامل کیا گیا ہے جس سے مقابلہ سازی کی فضا قائم نہیں ہو سکتی اور اس سے کوالٹی بھی متاثر ہوگی جبکہ گومل یونیورسٹی و دیگر ایم اے سرائیکی کے امتحانات بھی لے رہی ہے ۔ کوالٹی کتب نہ ہونے کی وجہ سے ایم اے سرائیکی کے امتحانات بھی متاثر ہونے کا خدشہ پیدا ہو گیا ہے ۔ مختلف ماہرین تعلیم کی رائے اس بات سے بھی متفق ہیں کہ مختلف ریویو سے کوالٹی بہتر ہوجائے گی ۔ ان کے مطابق مختلف کتب میں مختلف ذہن رکھنے والے لکھاری ہوتے ہیں ۔ اور ان کے اپنے اپنے آئیڈیاز ہوتے ہیں ۔ اور ہر ایک کا اپنا تخلیقی کام ہوتا ہے ۔ جبکہ ریویور کا کام نوک پلک سنوارنا ہوتا ہے اس کیلئے کوالٹی کی بہتری کیلئے مختلف کتب کا ہونا ضروری ہے ۔ اس لئے مختلف تنظیموں اور عوامی حلقوں نے حکومت وقت سے مطالبہ کیا ہے کہ دیگر پبلشرز کو بھی اس میں شامل کیا جائے اور اس سلسلہ میں نئی بڈز کا اعلان کیا جائے بصورت دیگر سرائیکی تنظیمیں احتجاج کا سلسلہ شروع کریں گی جبکہ سرائیکی تنظیموں کی طر ف سے ڈائریکٹر انٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ پشاور عثمان زمان،اسسٹنٹ ڈائریکٹر اینٹی کرپشن ڈیرہ عبدالحئی خان بابڑ اورسرکل آفیسر اینٹی کرپشن ڈیرہ منہاج سکندر یار خان بلوچ سے اپیل کی گئی ہے کہ اس تعلیمی سرائیکی کتب میں غفلت کے حوالے سے محکمہ اینٹی کرپشن فوری طور پر اوپن انکوائری کرکے مسئلے کا حل نکالیں ۔

از طرف محمد ریحان
ڈیرہ اسماعیل خان :واپڈا ڈیرہ کا بجلی چوروں کے خلاف بڑے پیمانے پر آپریشن،ڈائریکٹ کنڈے لگا کر بجلی حاصل کرنے والوں کے کنڈے اتار لئے،ٹمپرڈ میٹرز موقع پر پکڑ لئے،درجنوں افراد کے خلاف قانونی کارروائی،تفصیلات کے مطابق ایکسین واپڈا سٹی ڈویژن ڈیرہ حزب اللہ خان محسود کی قیادت میں ایس ڈی او درابن عثمان بزدار نے واپڈا سٹاف اور پولیس کے ہمراہ درابن سب ڈویژن کے مختلف علاقوں میں بجلی چوروں،واپڈا نادہندگان اور بغیر میٹر کے بجلی حاصل کرنے والوں کے کیخلاف آپریشن کیا۔اس دوران موقع پر کئی کنڈے اتارے جن سے ڈائریکٹ بجلی حاصل کی جارہی تھی جس سے واپڈا کے لائن لاسز بڑھ رہے تھے اور ریکوری بھی کم ہورہی تھی۔موقع پر بارہ ٹمپرڈمیٹر موقع پر پکڑے اور بجلی چوری کرنے والے تین افرادکیخلاف متعلقہ تھانے میںالگ الگ مقدمات درج کرائے گئے۔ایکسین واپڈا حزب اللہ کے مطابق کسی بھی بجلی چور کی کسی صورت معاف نہیں کیا جائے گا۔بجلی چوری سے دیگر صارفین کو لوڈشیڈنگ کے عذاب سے دوچار ونا پڑتا ہے۔انہوں نے کہا کہ بجلی چوروں کیخلاف کاروائیوں میں عوام تعاون کریں اوربجلی چوری کی حوصلہ شکنی کریں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں