68

ٹیکس نہ دینے پر ہزاروں اوور سیز پاکستانیوں کے موبائل فون بند کر دئیے گئے

ڈیرہ اسماعیل خان ٹیکس نہ دینے پر ہزاروں اوور سیز پاکستانیوں کے موبائل فون بند کر دئیے گئے۔تفصیلات کے مطابق پی ٹی اے نے کورونا کے باعث پاکستان میں رہنے پر مجبور ہزاروں اوور سیزپاکستانیوں کے موبائل فون ٹیکس نہ دینے پر بند کر دئیے۔گذشتہ سال نومبر، دسمبر اور جنوری میں پاکستان آنے والوں میں سے تقریبا 50ہزار افراد امریکا، برطانیہ ، کینیڈا، یورپی ممالک اور جنوبی کوریا سے پروازیں معطل ہونے کے باعث یہاں پھنسے ہوئے ہیں اور مختلف ائیر لائنز کی جانب سے انہیں بار بار نئی تاریخ دی جا رہی ہے۔کورونا کی تیسری لہر نے ان کی واپس کو ناممکن بنا دیا ہے۔تاہم جن مسافروں کو پاکستان میں 60 دن ہو چکے ہیں۔ان کے موبائل فون بند کر دئیے گئے ہیں کیونکہ پی ٹی اے کی پالیسی ہے کہ بیرون ملک سے آنے والا موبائل فون 60 دن استعمال کرنے کے بعد ٹیکس ادا نہ کرنے پر بند کر دیا جاتا ہے۔بیرون ملک سے آئے پاکستانی زیادہ تر مہنگا موبائل فون استعمال کرتے ہیں جن پر کم از کم ٹیکس 30 سے 40 ہزار فی موبائل ہے۔انتظار کی سولی پر لٹکے ان مسافروں کے موبائل فون بند کر کے انہیں ذہنی اذیت دینے کا نیا سامان مہیا کر دیا گیا ہے۔پاکستانیوں کی جانب سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ اس پالیسی کو تبدیل کیا جائے گا۔ خیال رہے کہ24 فروری 2021 کو حکومت نے بیرون ملک سے موبائل فون منگوانے پر ڈیوٹی اور ٹیکس میں اضافہ کیا تھا۔ ایف بی آر دستاویزات کا حوالہ دیتے ہوئے بتایا گیا کہ ایف بی آر کے مطابق امپورٹڈ موبائل فونز کی ڈیوٹی میں اضافہ ان کی ویلیو بڑھا کر کیا گیا ، نئی کسٹم ویلیو انفرادی اور کمرشل امپورٹ دونوں پر لاگو ہوگی۔رپورٹ کے مطابق ڈیوٹی اور کسٹم میں اضافہ باہر سے امپورٹ ہونے والے 563ا قسام کے موبائل فونز کی امپورٹ پر کیا گیا ، مذکورہ اضافہ مجموعی طور پر 3 سے 21 فیصد تک کیا گیا ہے ، اس کے علاوہ ویلیوایشن ڈائریکتوریٹ کو امپورٹ ہونے والے ان نئے موبائل فوئنز کی نئی قیمتوں کے تعین کا اختیار بھی دے دیا گیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں