36

باپ گھر میں اپنا پسٹل صاف کررہا تھا کہ اس دوران اس کی چھ سالہ بچی صبح تیار ہوکر اسے سکول پہنچانے کی ضد کرنے لگی ،باپ نے بیٹی کو کہا کہ ابھی چلتے ہیں لیکن اس دوران اچانک گولی چل گئی جو کہ باپ کے ہاتھ میں لگ کر بچی کے سر سے بھی پار ہوگئی

سکول جانے کی ضد بچی کی جان لے گئی

ڈیرہ اسماعیل خان سکول جانے کی ضد بچی کی جان لے گئی ،سکول جانے کے لئے والد سے ضد کرنے والی بچی والد کی گولی کا نشانہ بن کر سکول کی بجائے لحد میں جاپہنچی ،بچی کو اشکبار آنکھوں سے سپرد خاک کردیاگیا ،تھانہ ٹاﺅن کی حدود ظفرآباد کالونی میں چھ سالہ بچی صبح تیار ہوکراپنے والد سے سکول جانے کی ضدکررہی تھی کہ اس دوران بچی کے باپ کے ہاتھوں میں موجود پسٹل کی گولی اچانک چل گئی جس کے نتیجے میں گولی باپ کے ہاتھ کو زخمی کرتی ہوئی بچی کے سرمیں جالگی جس سے وہ موقع پر ہی جاں بحق ہوگئی ،پولیس ذرائع کے مطابق متوفی بچی کا باپ گھر میں اپنا پسٹل صاف کررہا تھا کہ اس دوران اس کی چھ سالہ بچی صبح تیار ہوکر اسے سکول پہنچانے کی ضد کرنے لگی ،باپ نے بیٹی کو کہا کہ ابھی چلتے ہیں لیکن اس دوران اچانک گولی چل گئی جو کہ باپ کے ہاتھ میں لگ کر بچی کے سر سے بھی پار ہوگئی ،بچی کو اشکبار آنکھوں کے ساتھ مقامی قبردستان میں سپرد خاک کردیاگیا ہے۔ 

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں