42

دس گھنٹے بعد کراچی کے ضمنی انتخاب میں پیپلزپارٹی خاموشی سے جیت گئی مریم نواز کا انتخاب چرانے کا الزام

کراچی: 276 پولنگ اسٹیشنز کا غیر حتمی غیر سرکاری نتیجہ موصول ہوگیا

پیپلز پارٹی کے امیدوار قادر خان مندوخیل نے 16156 ووٹ حاصل کرکے فتح حاصل کرلی

نون لیگ کے امیدوار مفتاح اسماعیل 15573 ووٹ حاصل کرکے دوسرے نمبر پر رہے

پاکستان مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے این اے 249 کراچی کی نشست پر پیپلز پارٹی کے امیدوار کی کامیابی کے بعد الیکشن کمیشن سے نتائج روکنے کا مطالبہ کیا ہے۔

اپنی ٹوئٹ میں مریم نے کہا کہ چند سو ووٹوں سے ن لیگ سے جیت چرائی گئی، الیکشن کمیشن کو متنازع ترین انتخابات میں سے ایک اس الیکشن کا نتیجہ روکنا چاہیے اور اگر الیکشن کمیشن ایسا نہ بھی کرے تو بھی یہ کامیابی عارضی ہوگی اور جلد فتح ن لیگ کے حصے میں آئےگی۔

این اے 249کراچی کا ضمنی انتخاب پیپلز پارٹی کے امیدوار قادر خان مندوخیل نے جیت لیا یوں پی ٹی آئی اپنی اس نشست سے محروم ہوگئی۔

این اے 249 ضمنی الیکشن کے تمام 273 پولنگ اسٹیشنز کے غیرحتمی اورغیرسرکاری نتائج کے مطابق پیپلز پارٹی کے قادر خان مندوخیل کامیاب قرار پائے۔

پیپلزپارٹی کے قادرخان مندوخیل 16156 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے،ن لیگ کے مفتاح اسماعیل 15473 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

ٹی ایل پی کے نذیر احمد 11125 ووٹ لے کر تیسرے، پی ایس پی کے مصطفیٰ کمال 9227 ووٹ لے کر چوتھے، پی ٹی آئی کے امجد آفریدی 8922 ووٹ لے کر پانچویں اور ایم کیوایم کے حافظ محمد مرسلین 7511 ووٹ لے کر چھٹے نمبر پر ہیں۔

تمام پولنگ اسٹیشنز کے نتائج کا اعلان ہوتے ہی بلاول نے سوشل میڈیا پر تیر کے نشان کے ساتھ شکریہ کراچی کا پیغام شیئر کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں