22

اسلام آباد کے غوری ٹائون کے مکین احتجاج کرتے ہوئے سڑکوں پر نکل آئے بعض علاقوں میں نجلی اور گیس کے نئے کنکشنز پر عائد پابندی ہٹانے کا مطالبہ

اسلام آباد کے شہری بطور احتجاج سڑکوں پر نکل آئے

بعض علاقوں میں نجلی اور گیس کے نئے کنکشنز پر عائد پابندی ہٹانے کا مطالبہ

غوری ٹاون سمیت ملحقہ علاقوں کے لوگوں نے اسلام آباد ایکسپریس وے بلاک کرنے کی دھمکی دیدی


امن و امان کا مسئلہ پیدا ہونے کا خدشہ، پولیس کی بھاری نفری بھی پہنچ گئی

سی ڈے اے سمیت ضلعی انتظامیہ عوام کے مسائل حل کرنے میں ناکام، رانا عبدالقیوم صدر عوری ویلفیئر ایسوسی ایشن
سال 2000 سے 2015 تک بجلی اور گیس کے میٹر لگتے رہے ہیں، مظاہرین

لیکن گزشتہ 6 سال سے نئے کنکشنز پر پابندی عائد ہے، مظاہرین


گیس، بجلی نہ ہونے کی وجہ سے خواتین، بچوں کو بھی شدید مسائل کا سامنا ہے، مظاہرین

مطالبات پورے نہ کیئے گئے تو دھرنا دیا جائے گا، مظاہرین کا اعلان
بجلی اور گیس کے نئے کنکشنز پر 2015 سے غیر قانونی پابندی عائد ہے، مظاہرین

نجی ہاوسنگ سوسائٹیز میں لاکھوں کی آبادی مقیم ہے، مظاہرین

اسلام آباد جیسے شہر میں بجلی، گیس کی سہولت نہ دینا بنیادی انسانی حقوق کی خلاف ورزی ہے، مظاہرین

ہزاروں کی تعداد میں مظاہرین کا مارچ، احتجاجی نعرے
اسلام آباد
غوری ٹاؤن میں بنیادی سہولتوں کی عدم فراہمی پر شہریوں کا احتجاج

سینکڑوں کی تعداد میں شہریوں اسلام آباد ایکسپریس وے پر پہنچ گئے

شہریوں کی حکومت اور سی ڈی اے کے خلاف شدید نعرے بازی

سی ڈی اے کی جانب سے گیس اور بجلی کی میٹرز پر گزشتہ سات سال سے پابندی ہے


شہریوں کو ضروریات زندگی کی بنیادی سہولتوں سے محروم نہیں رکھا جا سکتا, موقف

حکومت اور سی ڈی اے یہاں سے پورا ٹیکس وصول کرتے ہیں, شہریوں کا موقف

ٹیکس وصولی کے باوجود بنیادی سہولتیں فراہم نہیں کی جا رہیں, شہری

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں