91

عمران خان کی بڑھک خالی بڑھک ہی ثابت ہوئی*

*فارن فنڈنگ کیس: پاکستان تحریک انصاف نے سکروٹنی کمیٹی کی کارروائی اوپن نہ کرنے کی استدعا ایک بار پھر کر دی*
*عمران خان کی بڑھک خالی بڑھک ہی ثابت ہوئی*

*,بڑکیں مارنے میں عمران خان پہلے ہی مشہور ہیں*
*عمران خان کہتے ہیں بڑھک مار دو کونسا ہم نے کام کرنا ہے*
*جس طرح الیکشن سے پہلے بھی عمران خان نے بڑے بڑے دعوے وعدے اور بڑھکیں ماری تھی لیکن آج تک کوئی بھی ایک وعدہ پورا نہ کر سکے*

*آج سے چند دن پہلے وزیراعظم عمران خان نے وزیرستان میں اپنے خطاب کے دوران کہا تھا کہ ہماری پارٹی نے فنڈ لیا ہے ہمارے پاس 40 ہزار ڈونر کا ریکارڈ موجود ہے*
*دوسری پارٹیاں اپنی پارٹی فنڈ سامنے لائیں اور ٹیلی ویژن پر بیٹھ کر تمام پارٹیوں کی فارن فنڈنگ کا حساب اور پتہ چلے*

*وزیر اعظم عمران خان نے دعویٰ کیا ہے کہ وہ الیکشن کمیشن میں یہ مقدمہ جیت جائیں گے تاہم اس دعوے کے برعکس ماضی میں پاکستان تحریک انصاف غیر ملکی فنڈنگ کے حوالے سے الیکشن کمیشن کو کارروائی سے روکنے کے لیے اسلام آباد ہائی کورٹ میں درخواستیں دائر کرتی رہی ہے۔*

*پاکستان تحریک انصاف کے خلاف ممنوعہ ذرائع سے فنڈز حاصل کرنے کا معاملہ الیکشن کمیشن میں کوئی سیاسی مخالف جماعت نہیں بلکہ تحریک انصاف کے اپنے بانی اراکین میں سے ایک اکبر ایس بابر سنہ 2014 میں لے کر آئے تھے۔*
*اس درخواست میں اکبر ایس بابر کی طرف سے وزیر اعظم کے اس بیان کو کہ ان کے پاس غیر ملکی فنڈنگز کے تمام شواہد موجود ہیں، کو بنیاد بناتے ہوئے یہ مطالبہ بھی کیا کہ وہ 40 ہزار ڈونرز کے ناموں کی فہرست دینے کے ساتھ ساتھ ان 23 بینک اکاؤنٹس کی تفصیلات بھی فراہم کریں جن میں پاکستان تحریک انصاف کے لیے غیر ملکی فنڈز آئے ہیں*

*پاکستان تحریک انصاف نے فارن فنڈنگ کیس کے معاملے میں حال ہی میں وزیر اعظم عمران خان کی طرف سے اس معاملے کی کارروائی کو اوپن کورٹ میں کروانے کے بیان کی مخالفت کر دی ہے۔*

*تحریک انصاف نے عمران خان کے اس بیان کی نفی کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس حوالے سے الیکشن کمیشن پہلے ہی ایک وضاحتی بیان جاری کر چکی ہے کہ غیر ملکی فنڈنگ کے معاملے کی تحقیقات کے لیے سکروٹنی کمیٹی کی کارروائی ان کیمرہ ہوگی۔*

*پاکستان تحریک انصاف کی جانب سے یہ جواب فارن فنڈنگ کیس میں پارٹی کے وکیل شاہ خاور کی طرف سے الیکشن کمیشن میں جمع کروایا گیا ہے۔*

*شاہ خاور نے بتایا کہ درخواست گزار اکبر ایس بابر کی طرف سے ایک درخواست سکرونٹی کمیٹی میں دی گئی تھی جس میں وزیر اعظم عمران خان کے جنوبی وزیرستان میں حالیہ خطاب کو بنیاد بنایا گیا*

*اس بیان میں وزیر اعظم عمران خان نے کہا تھا کہ ان کی جماعت کو بیرون ممالک سے جتنے بھی فنڈز ملے ہیں ان کے شواہد ان کی جماعت کے پاس موجود ہیں لہذا وہ اس سکروٹنی کمیٹی کی کارروائی کو اوپن کرنے کو تیار ہیں۔*۔

*یاد رہے کہ جب سے فارن فنڈنگ کیس چل رہا ہے پی ٹی آئی الیکشن کمیشن میں ہر بار یہی درخواست دیتی رہی ہے کہ یہ معاملہ میڈیا تک نہ جائے اور اب عمران خان نے بڑھک مار دی*
*لیکن پی ٹی آئی کے وکیل نے کہا کہ سکیورنٹی کمیٹی اس معاملے کو میڈیا تک نہ لے کر آئے*
*اگر تحریک انصاف چور نہیں ہے تو پھر میڈیا میں کاروائی کیوں نہیں لا رہی ہیں*
*جو بھی ایماندار بندہ تھا اس کو پی ٹی آئی سے نکال دیا گیا اب پی ٹی آئی میں صرف لٹیرے ہیں جو عوام کا زکوۃ صدقہ خیرات ہر چیز کھا جاتے ہیں*

*🛡King*

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں